0

بی جے پی کے رہنماء کو موت کے گھاٹ اُتار دیا گیا

Share

بھارت کے شہر حیدرآباد کے یوسف گوڑہ علاقے میں بی جے پی کے رہنماء کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا، جبکہ مقتول کا پرائیویٹ پارٹ بھی کاٹ دیا گیا۔

غیر ملکی ذرائع ابلاغ کے مطابق رات گئے نامعلوم افراد نے یوسف گوڑہ کے لکشمی نرسمہا نگر میں محبوب نگر ضلع کے بی جے پی لیڈر رامو پر حملہ کرتے ہوئے اسے بے دردی سے قتل کردیا۔

مقامی لوگوں کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ 10 افراد نے بی جے پی رہنماء حملہ کردیا، اس حملے میں بی جے پی کا رہنماء رامو موقع پر ہی ہلاک ہوگیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ بی جے پی رہنماء رامو رئیل اسٹیٹ کے کاروبار سے بھی منسلک تھا اور آنے والے لوک سبھا انتخابات میں ناگر کرنول پارلیمنٹ سے بی جے پی کے ٹکٹ پر مقابلہ کرنے کی تیاری کررہا تھا۔

ابتدائی اطلاعات کے مطابق قتل کی وجہ ناجائز تعلقات بتائی گئی ہے تاہم اس حوالے سے مکمل تفصیلات معلوم نہیں ہوسکیں، پولیس نے واقعہ کا مقدمہ درج کرلیا ہے، جبکہ ملزمان کی تلاش کا عمل شروع کردیا گیا ہے۔

دوسری جانب بھارت میں بیوٹی پارلر کے باہر کھڑی خاتون کو لفٹ دینے والے شخص نے گھر لاکر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا، زبان کھولنے پر سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دیں۔

بھارت کے شہر غازی آباد میں 36 سالہ خاتون بیوٹی پارلر کے باہر کھڑی تھی، اس دوران اس کے ایک واقف کارنے لفٹ دینے کی پیشکش کی۔ تاہم وہ خاتون کو اپنے کرائے کے مکان پر لے گیا اور اسے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔

مذکورہ واقعہ ماسوری کے علاوقے میں اتوار کو اس وقت پیش آیا جب خاتون بیوٹی پارلر کے باہر گھر جانے کے لیے کسی سواری کا انتظار کررہی تھی۔ملزم کی شناخت 38 سالہ انکور چوہدری کے نام سے ہوئی ہے جو کہ خاتون کا جاننے والا بتایا جاتا ہے۔

Comments


#بی #جے #پی #کے #رہنماء #کو #موت #کے #گھاٹ #اتار #دیا #گیا